تازہ ترین خبر

مولانا قمر انجم فیضی کی اہلیہ کے انتقال پر ایصال ثواب کی محفل ہوئی منعقد

جیسا کہ اللہ تعالیٰ نے قرآن مجید میں ارشاد فرمایا ہے کہ کل نفس ذائقۃ الموت، ہر جاندار چیز کو موت کا مزہ چکھنا ہے، جس کی موت جس وقت، جس ٹائم پر لکھی ہوئی ہے اس کی اس وقت اس جگہ پر موت واقع ہوتی ہے ،یہ سال 2020 بہت ہی غمگین اور تکلیف دہ والا سال گذرا ہے، ابھی تو 4 ماہ باقی ہیں اس سال، خدانخواستہ کون بچے اور کون داغ مفارقت دے جائے، اس سال کافی تعداد میں علماء کرام اس دنیائے فانی سے دارِ بقا کی جانب تشریف لے گئے،

اسی کے تحت حضرت مولانا محمد قمر انجم قادری فیضی صاحب کی اہلیہ محترمہ کا مختصر علالت کے بعد 3 اگست بروز سوموار کو انتقال پُرملال ہوا، آج 12 بجے دوپہر میں فاتحہ برائے ایصال ثواب کی مجلس منعقد ہوئی تھی،جس میں مدرسہ کے طلباء وطالبات نے قرآن پاک پڑھی، اور انکے لئے دعائے مغفرت کی گئی، اس مجلس میں خصوصی طور پر شریک ہونے والے علماء کرام میں حضرت علامہ مولانامحمدنسیم صاحب قبلہ بڑھنی بازار چافہ، حضرت حافظ وقاری کتاب اللہ صاحب جمالڈیہہ چافہ ،حضرت مولانا پرویز رضافیضانی بھوانی گنج،، اور ساتھ ہی ساتھ والد گرامی عالی جناب ماسٹرمحمدخلیل احمدکے علاوہ بہت سارے لوگ موجود تھے،

نیز فون کرکے تعزیت پیش کرنےوالوں میں عظیم علماء ادباء بلخصوص، مشہورنامہ نگارو سوشل ایکٹوسٹ حضرت علامہ فیاض احمدمصباحی برکاتی، جنرل سکریٹری مدارس عربیہ ٹیچرس ایسوسی ایشن یونٹ بلرامپور،مشہومزاح نگار ڈاکٹرمحمدقائم الاعظمی علیگ برجمن گنج،حضرت مولانا ارشدخان فیروزآبادی صاحب، مشہورصحافی حضرت علامہ قاری نورالہدی مصباحی گورکھپوری، حضرت علامہ مولانا ازہرالقادری مٹہنا،مشہورصحافی علامہ عبدالرشیدمصباحی دھانےپورگونڈہ، علامہ شعیب رضانظامی فیضی، ایڈیٹرہماری آواز، حضرت مفتی محمد ضیاء الحق فیضی فیض آباد، مشہورِ زمانہ قلم کار علامہ کمال احمدعلیمی جمداشاہی، علامہ غیاث الدین خان صاحب چھتونا، علامہ عبداللہ عارف صدیقی شہرت گڑھ، قومی صحافت کے ایڈیٹرجناب شاہد بھائی، پیپلس الائینس تنظیم ڈومریاگنج کےصدرجناب شاہ رخ بھائی، حضرت علامہ مفتی عبدالحکیم نوری، حضرت علامہ صاحب علی یارعلوی بندیشرپور وغیرہ نے فون کرکے تعزیت پیش کی اور دعائے مغفرت کی، اور میں شکرگزارہوں استاذمحترم علامہ غلام جیلانی فیضی صاحب دھسوا، علامہ مفتی طاہر فیضی صاحب جو کہ گھرپر تعزیت کے لئے تشریف لائے،
اہلیہ محترمہ کے انتقال پر علامہ فیاض احمدمصباحی برکاتی تعزیت پیش کرتے ہوئے رقم طرازہیں،
ملک کے نئے ابھرتے ہوئے جوان عالم دین مشہورکالم نویس مولانا محمدقمر انجم فیضی صاحب کو اس وقت دلی صدمہ پہونچا ہے ، ہم مولانا کے اس غم میں برابر کے شریک ہیں اور دعا کرتے ہیں کہ اللہ تعالی مولانا کے غم کو ہلکا کردے اور ان کو ذہنی سکون عطا کرے ۔اطلاع کے مطابق مولانا کی زوجہ محترمہ کچھ دنوں سے علیل چل رہی تھیں ، سر درد سے پریشان تھیں ، مولانا قمرانجم صاحب نے خوب علاج ومعالجہ بھی کرایا اور افاقہ بھی ہوا لیکن پروردگار عالم کو شاید کچھ اور ہی منظور تھا کہ اچانک داغ مفارقت دے گئیں ۔ ایک دو دن پہلے گورکھپور شہر کے سب سے بڑے ہاسپٹل میں علاج کے لیے ایڈمٹ کرایا گیا کچھ دن علاج کے بعد ڈاکٹر نےمشورہ دیا کہ دوائیاں لے کر گھر جائیں اوردوائی کا استعمال کرائیں ۔مریضہ کو لے کر گھر ٓاگئے اور ڈاکٹر کے مشورے پر عمل کرنے لگے کہ اسی بیچ وقت اجل آپہونچا اور مرحومہ سب کو روتا بلکتا چھوڑکر اپنے ٓاخری سفر پر روانہ ہوگئیں ۔
ہم اس پریشان کن گھڑی میں مولاناقمر انجم کے شانہ بشانہ کھڑے ہیں اور دعا کرتے ہیں اللہ مولانا کو صبر جمیل کی توفیق عطاکرے۔

Related posts

خانقاہ قادریہ راہ سلوک، سیتامڑھی میں ایصال ثواب کا پروگرام

آزادی کا پس منظر اخبارات، رسائل اور صحافیوں نے تیار کیا: سراج احمد قریشی

Hamari Aawaz Urdu

فلم “محمد دے میسنجر آف گوڈ ” کی ریلیز پر پابندی لگانے کے لئے مسلمانوں کو ہر قانونی کوشش کرنی چاہئے

Hamari Aawaz Urdu

ایک تبصرہ چھوڑیں